Close
 
 
 

انسانی حقوق

 
 

انسانی حقوق

ہمیں اپنے آپریشنز ہمیشہ ایسے انداز میں انجام دینے چاہئیں جو ہمارے ملازمین کے، جن لوگوں کے ساتھ ہم کام کرتے ہیں ان کے اور جن کمیونٹیز میں ہم کام کرتے ہیں ان کے انسانی حقوق کا احترام کرتا ہو۔

 

ہم کس چیز پر یقین رکھتے ہیں

ہم سمجھتے ہیں کہ ان بنیادی انسانی حقوق کا احترام کیا جانا چاہیے جن کی توثیق انسانی حقوق کے عالمی اعلامیہ کے ذریعہ کی گئی ہے۔

لوگوں اور انسانی حقوق کے طریقۂ کار سے متعلق ہماری پالیسی مزدوروں سے متعلق مقامی اور بین الاقوامی قوانین، سفارش کردہ طریقۂ کار اور رہنما اصولوں2پر مبنی ہے۔

ہم مزدوروں سے متعلق سبھی قابل اطلاق قوانین وضوابط کی تعمیل کرتے ہیں۔

 

بچہ مزدوری نہیں

ہم اس بات کو یقینی بنانے کے لیے پرُعزم ہیں کہ ہمارے آپریشنز بچہ مزدوری سے پاک ہوں۔ ہم اس بات کو یقینی بنانے کی کوشش کرتے ہیں کہ بچوں کی فلاح و بہبود، صحت اور تحفظ ہمیشہ سب سے بڑھ کر رہے۔ ہم جانتے ہیں کہ بچوں، ان کی کمیونٹیز اور ان کے ممالک کی ترقی کے لیے سب سے بہتر خدمت تعلیم کے ذریعہ فراہم کی جاتی ہے۔

ہم ILO کنوینشنز 138 اور 182 کی تائید کرتے ہیں جو ملازمت میں داخلہ کے لیے اور بچہ مزدوری کی بدترین شکلوں کے خاتمہ کے لیے کم سے کم عمر سے متعلق بنیادی اصول کی وضاحت کرتے ہیں۔

ایسے ہی:

  • کوئی بھی ایسا کام جو نقصان دہ سمجھا جاتا ہے یا جو امکانی طور پر بچوں کی صحت، سلامتی یا اخلاقیات کو نقصان پہنچا سکتا ہے وہ 18 سال سے کم عمر کے کسی فرد کے ذریعہ نہیں کیا جانا چاہیے
  • کام کرنے کے لیے کم سے کم عمر لازمی اسکولنگ مکمل کرنے کے لیے قانونی عمر سے کم نہیں ہونی چاہیے اور، کسی بھی صورت میں، 15 سال کی عمر سے کم نہیں ہونی چاہیے

ہم اپنے مہیاکنندگان اور کاروباری شراکت داروں سے توقع رکھتے ہیں کہ وہ ہمارے کم سے کم عمر کے تقاضوں کو پورا کریں، جیسا کہ ہمارے مہیاکنندہ کے طرز عمل میں بیان کیا گیا ہے۔ اس میں شامل ہے، جہاں مقامی قانون اجازت دیتا ہو، 13 اور 15 سال کے درمیان کی عمر کے بچے ہلکے کام کر سکتے ہیں، بشرطیکہ یہ ان کی تعلیم یا پیشہ ورانہ تربیت میں رکاوٹ نہ ڈالتا ہو، یا اس میں کوئی ایسی سرگرمی شامل نہ ہو جو ان کی صحت یا نشوونما کے لیے نقصان دہ ہو )مثال کے طور پر، مشینی آلات یا ایگرو کیمیکلز کو ہینڈل کرنا(۔ ہم کسی اہل مقتدرہ کے ذریعہ منظور شدہ تربیت یا کام کے تجربہ سے متعلق اسکیموں کو بھی استثناء کے طور پر تسلیم کرتے ہیں۔

 

انسانی حقوق کی پاسداری

ہم، اپنے سپلائی چین سمیت اپنے دائرۂ اثر میں انسانی حقوق کے فروغ کے لیے پرُعزم ہیں۔ ہم پوری دنیا میں کام کرتے ہیں، بشمول ان ممالک کے جو تنازعات سے جوجھ رہے ہیں یا جہاں جمہوریت، قانون کی حکمرانی یا اقتصادی ترقی کمزور ہے، اور انسانی حقوق خطرہ میں ہیں۔

ہمارے تمام مہیاکنندگان سے توقع کی جاتی ہے کہ وہ ہمارے مہیاکنندہ کے طرز عمل کے تقاضوں کو پورا کریں، اور اس کو مہیاکنندگان کے ساتھ ہمارے معاہدہ جاتی انتظامات میں شامل کیا جاتا ہے۔

جہاں تک ممکن ہوتا ہے، ہماری واجبی محتاط کارروائیاں ہمیں ہماری پالیسی سے متعلق عہد بستگی اور ہمارے مہیاکنندہ کے طرز عمل کی اثر آفرینی اور ان سے متعلق تعمیل پر نظر رکھنے، اور ساتھ ہی ساتھ انسانی حقوق سے متعلق خطرات، اثرات اور زیادتیوں کی شناخت کرنے، ان کی روک تھام کرنے اور انہیں کم کرنے کا اہل بناتی ہیں۔

ہم انسانی حقوق سے متعلق ایسے کسی بھی مسائل کی پوری طرح تفتیش کرنے اور انہیں حل کرنے کے تئیں پرعزم ہیں جن کی شناخت ہمارے آپریشنز یا سپلائی چین میں کی جاتی ہے اور ہم مسلسل اصلاح کی کوشش کرنے کے تئیں بھی پرعزم ہیں۔ اگر ہم کسی مہیاکنندہ کے ضمن میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی شناخت کرتے ہیں، لیکن اصلاحی کارروائی کے تئیں کوئی واضح عہدبستگی نہیں پائی جاتی ہے، مسلسل عدم کارروائی یا عدم بہتری پائی جاتی ہے تو اس مہیاکنندہ کے ساتھ ہمارا کام بند ہونا چاہیے۔

 

ایسوسی ایشن کی آزادی

ہم ایسوسی ایشن کی آزادی اور مجموعی سودے بازی کا احترام کرتے ہیں۔

ہمارے کارکنان کو اس بات کا حق حاصل ہے کہ ان کی نمائندگی کمپنی کی طرف سے تسلیم شدہ ٹریڈز یونینوں، یا دیگر حقیقی نمائندگان کے ذریعہ کی جائے۔ اس قسم کے نمائندوں کے ساتھ امتیازی سلوک نہیں کیا جانا چاہیے اور وہ مقام کار پر قانون، ضابطہ، مروجہ لیبر سے متعلق رشتوں اور طریقۂ کار اور کمپنی کی متفقہ کارروائیوں کے فریم ورک کے اندر اپنی سرگرمیاں انجام دے سکتے ہیں۔

 

مزدوروں کا عدم استحصال یا جدید دور کی غلامی

ہم اس بات کو یقینی بنانے کے لیے پرعزم ہیں کہ ہمارے آپریشنز غلامی، محکومی اور جبری، مجبوری، بندھوا، غیر ارادی، خرید و فروخت شدہ یا غیر قانونی تارکین وطن کی مزدوری سے پاک ہوں۔ گروپ کمپنیاں اور ملازمین )اور کوئی بھی امپلائمنٹ ایجنسی، لیبر بروکرز یا تھرڈ پارٹیز جنہیں وہ ہماری طرف سے کام کرنے کے لیے رکھتے ہیں(:
  • کارکنان سے تقرری کی فیس ادا کرنے، قرضے لینے یا ملازمت کی شرط کے طور پر غیر معقول سروس چارجوں یا ڈپازٹ کی ادائیگی کرنے کا مطالبہ نہیں کریں گیملازمت کی شرط کے طور پر کارکنان سے شناختی دستاویزات، پاسپورٹ یا پرمٹ کو حوالہ کرنے کا مطالبہ نہیں کریں گی

جہاں قومی قانون یا ملازمت کی کارروائیاں شناختی کاغذات کے استعمال کا تقاضا کرتی ہیں، وہاں ہم قانون کے مطابق انہیں سختی سے استعمال کریں گے۔ اگر کبھی سیکورٹی یا حفاظت کی وجوہات کی بنا پر شناختی کاغذات رکھے یا ذخیرہ کیے جاتے ہیں تو ایسا کارکن کی باخبری پر مبنی اور تحریری رضامندی کے ساتھ ہی کیا جائے گا، جو حقیقی ہونی چاہیے؛ اور ایسا کارکن کے لیے، ہمیشہ، بغیر کسی رکاوٹ کے، انہیں دوبارہ حاصل کرنے کی لامحدود رسائی کے ساتھ ہونا چاہیے۔

 

مقامی کمیونٹیاں

ہم جن کمیونٹیز میں کام کرتے ہیں ان کے منفرد سماجی، اقتصادی اور ماحولیاتی مفادات کی نشاندہی کرنے اور سمجھنے کی کوشش کرتے ہیں۔

ہمیں انسانی حقوق کے ان مخصوص خطرات کی شناخت کرنی چاہیے جو ہمارے آپریشنز سے متعلق ہوں، یا ان سے متاثر ہوں۔ ایسا کر کے، ہم اپنے اسٹیک ہولڈرز، بشمول ملازمین اور ان کے نمائندگان کی رائے طلب کریں گے۔

ہم اس بات کو یقینی بنانے کے لیے مناسب اقدامات اٹھائیں گے کہ ہمارے آپریشنز کے باعث انسانی حقوق کی پامالی نہ ہو اور ہمارے اقدامات کی وجہ سے راست طور پر انسانی حقوق پر پڑنے والے منفی اثرات کا مداوا ہو سکے۔

ہم اپنے ملازمین کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں کہ وہ اپنے مقامی اور کاروباری کمیونٹیز دونوں میں سرگرم کردار ادا کریں۔ گروپ کمپنیوں کو چاہیے کہ وہ ملازمین کے لیے اور ان کمیونٹیز میں جہاں ہم کام کرتے ہیں مہارتوں کے فروغ کے لیے مواقع پیدا کریں اور میزبان حکومتوں کے ترقیاتی اغراض و مقاصد اور اقدامات کے ساتھ ہم آہنگ ہو کر کام کرنے کا ہدف رکھیں۔

 

ہمارے تمام مہیاکنندگان سے توقع کی جاتی ہے کہ وہ ہمارے مہیاکنندہ کے طرز عمل کے تقاضوں کو پورا کریں، اور اس کو مہیاکنندگان کے ساتھ ہمارے معاہدہ جاتی انتظامات میں شامل کیا جاتا ہے۔

 

کس سے بات کریں

  • اپنے لائن مینیجر سے
  • اعلی انتظامیہ سے
  • اپنے مقامی LEX کونسل سے
  • ہیڈ آف کمپلائنس: sobc@bat.com
2 مقام کار پر بنیادی اصول اور حقوق سے متعلق ILO کا اعلامیہ، کاروبار اور انسانی حقوق سے متعلق اقوام متحدہ کے رہنما اصول اور ملٹی نیشنل کارپوریشنز کے لیے OECD کے رہنما اصول۔